Top 10 similar words or synonyms for چھاتیاں

abydos    0.852229

panoramic    0.845705

aqsa    0.845367

kathakali    0.842882

lobby    0.842622

sikri    0.839715

namib    0.839385

reptiles    0.839291

tiered    0.838969

kurukshetra    0.838812

Top 30 analogous words or synonyms for چھاتیاں

Article Example
ایمیزن The Amazons یونانی دیومالا کے مطابق جنگ جو عورتوں کی ایک نسل جو جنوب مشرقی یورپ میں آباد تھی۔ ان عورتوں نے یونانی دیومالا کے متعدد سورماؤں سے لوہا منوایا۔ سیتھببا، تھریس اور ایشائے کوچک کے علاقوں پر تابڑ توڑ حملے کیے اور عرب ، شام اور مصر تک کو اپنی ترک تازیوں کا نشانہ بنایا۔ ہیکٹر کی موت کے بعد، اپنی ملکہ پنیتھی سیلا کی قیات میں ٹرائے کی طرف سے لڑیں۔ انھوں نے اپنی داہنی چھاتیاں کاٹ ڈالی تھیں تاکہ کمان پوری طرح کھنچ سکے۔ صرف لڑکیوں کو فنون حرب سکھاتی تھیں۔ اولاد نرینہ افزائش نسل کے لیے پالی جاتی تھی۔ جدید مغربی ادب میں ایمیزن کا لفظ مرد مار عورتوں کے لیے استعمال ہوتا ہے۔
کلی ثقافت کلی ثقافت کی نمایاں ترین انفرادیت مٹی کی وہ مورتیاں ہیں جو کثیر تعداد میں ان علاقوں سے ملی ہیں۔ ان میں عورتوں اور جانوروں کی مورتیاں شامل ہیں۔ یہ مٹی کی بنی ہوئی ہیں اور بھٹی میں پکائی گئی ہیں۔ جانوروں کی مورتیوں پر مختلف رنگوں سے لکیریں لگائی گئی ہیں اور سجاوٹی نمونے بنائے گئے ہیں۔ حیرت کی بات یہ ہے کہ جانوروں کی شکل وہی ہے ، جو برتنوں پر مصور جانور مصور کی ہے۔ البتہ عورتوں کی مورتیوں پر کئی ثقافتی رنگ آمیزی نہیں کی گئی ہے۔ ان مورتیوں کی حثیت کا ابھی تعین نہیں کیا گیا ہے۔ یہ کھلونے بھی ہوسکتے ہیں اور دیوی دیوتاؤں مجسمے بھی اور دونوں چیزیں ملی جلی بھی ہوسکتی ہیں۔ ان میں سے انسانی مورتیاں تمام کی تمام ناف سے اوپر کی ہیں اور پیٹ چپکا ہوا ہے۔ چھاتیاں سباٹ ہیں۔ ناک ، آنکھیں اور کان بڑے بڑے ہیں۔ ان کے گلے میں سیپیوں کے ہار پڑے ہیں۔ سیپیوں کے ماہرین نے اندازاہ لگایا ہے کہ یہ دھرتی ماتا کی مورتیاں ہیں اور ان کی اہمیت طسلمی یا مذہبی ہے اور ان کا تعلق افزائش نسل اور فضل کی رسومات سے ہے۔ کیوں کہ سیپی کی شکل عورت کی فرج سے مشابہہ ہوتی ہے اور فرج تخلیق کی علامت ہے۔ تخلیق دھرتی ماتا کی خاص سنت ہے۔ اگر یہ قیاس آرائی صحیح ہے تو پھر اس کا مطلب ہے کہ دور دراز کے دیہاتوں میں لوگ گھروں میں ان مورتیوں سے جادو ٹوٹکہ کرکے تسخیر کائنات اور افزائش نسل و فضل کا یا دعا و مناجات کا کام لیتے تھے۔ یعنی یا تو یہ جادو کا زمانہ تھا یا مذہب کی ابتدا کا اور مذہب نے ابھی ایسے ادارے کی شکل اختیار نہیں کی تھی کہ جس میں سیاسی اقتدار بھی مرتکز ہوچکا ہو۔ ابھی پروہت بادشاہ کا دور شاید نہیں آیا تھا۔