Top 10 similar words or synonyms for الاخر

الآخر    0.836990

الاخری    0.822770

القعدہ    0.814100

المرجب    0.808245

قعدہ    0.797915

جمادی    0.795427

المعظم    0.793885

الاولی    0.789722

الاو    0.776149

عيسوی    0.775033

Top 30 analogous words or synonyms for الاخر

Article Example
سریہ ابو عبیدہ بن الجراح ربیع الاخر 6 ھ میں سریہ ابو عبیدہ بن الجراح ذی القصہ کی طرف 40 آدمیوں کے ساتھ بھیجا گیا
ابوسلمہ عبداللہ غزوہ احد میں زخمی ہوئے ٹھیک ہو گئے دوبارہ زخم ہونے سے جمادی الاخر 3ھ میں وفات پا گئے۔
سریہ شجاع بن وہب اسدی سریہ شجاع بن وہب الاسدی ربیع الاخر 8 ہجری میں السی کی طرف بنی عامر کی طرف بھیجا گیا۔
فاطمہ زھرا 3 جمادی الاخر 11ھ کو انتقال ہوا اور صحیحین کے مطابق بوجہ حضرت فاطمہ کی وصیت کے انہیں رات کے وقت دفنایا گیا۔۔
سریہ کعب بن عمیر غفاری سریہ کعب بن عمیر غفاری ربیع الاخر 8 ہجری میں ذات اطلاح میں جو وادی القریٰ کے آگے ہے بھیجا گیا ۔
امداد اللہ مہاجر مکی آپ نے بروز بدھ 12جمادی الاخر 1317ھ مکۃ المکرمہ میں داعی اجل کو لبیک کہا۔آپ کی تدفین جنت المعلیٰ میں شیخ کیرانوی رحمۃ اللہ تعالیٰ علیہ کے پہلو میں ہوئی۔
سریہ علقمہ بن مجزز مدلجی ربیع الاخر 9 ہجری میں حبشہ کی جانب سریہ علقمہ بن مجزز المدلجی بھیجا گیا اطلاع ملی کہ الحبشہ کے لوگ ہیں جنہیں اہل جدہ نے دیکھا رسول اللہ ﷺ نے علقمہ بن مجزز کو تین سو سواروں کے ہمراہ بھیجا جب وہ ہوں پہنچے تو سمندر چڑھ گیا یہ لوگ بھاگ کر ایک جزیرے پہ پہنچ گئےجب سمندر اتر گیا تو کافی دن گذرنے سے کچھ لوگ اپنے اہل و عیال کی طرف جانے کیلئے بیتاب ہو گئے عبد اللہ بن حذافہ السہمی کو ان گھروں میں جانے والوں پر امیر بنایا گیا
سریہ علی ابن ابی طالب (فلس) ربیع الاخر 9 ہجری کو قبیلہ طے کے ایک بت الفلس کو منہدم کرنے کیلئے سریہ علی بن ابی طالب بھیجا گیا۔ اس میں ڈیڑھ سو انصار شامل تھے سو اونٹنیوں پر اور پچاس گھوڑوں پر سوار تھے،اس میں بڑا جھنڈا سیاہ اور چھوٹا سفید رنگ کا تھا یہ صبح ہوتے ہی آل حاتم پر ٹوٹ پڑے بت کو توڑ دیا ان کے ہاتھ قیدی اور اونٹ بکریاں آئیں انہی قیدیوں میں عدی بن حاتم کی بہن بھی تھی جبکہ عدی بن حاتم اس وقت شام بھاگ گئے۔ الفلس کے خزانے سے تلواریں ملیں جن میں سے ایک کا نام رسوب دوسری کا المخذم اور تیسری کا الیمانی تھا۔
محمد عمر نعیمی مفتی محمد عمر نعیمی 27 ربیع الاخر 1311ھ بمطابق 6 ستمبر 1893ء کو مرادآباد، اتر پردیش میں جناب محمد صدیق کے گھر پیدا ہوئے۔ آپ کے والد محمد صدیق عمارتی لکڑی کے تاجر تھے آپ کی پیدائش سے قبل آپ کے کئی بھائی صغیر سنی میں انتقال کر چکے تھے اس وجہ سے آپ کے نانا شیخ کرامت علی نے منت مانی کہ بیٹا پیدا ہوا اور زندہ رہاتو میں اسے دین مصطفیٰ کی تبلیغ و اشاعت کے لیے وقف کر دونگا آپ زندہ رہے اور دین مصطفیٰ تبلیغ کے لیے وقف کر دیئے گئے۔
سریہ زید بن حارثہ (الطرف) جمادی الاخر 6 ہجری میں سریہ زید بن حارثہ طرف کے مقام کی جانب بھیجا گیا یہ ایک چشمہ ہے جو مدینہ سے 36 میل کی مسافت پر تھا الطرف النخیل اور المراض کے قریب البقرہ کے اس راستے پر ہے جو المحجہ کو گیااس میں زید بن حارثہ کے ساتھ 15 افراد بھی تھے جو بنو ثعلبہ کی جانب گئے بنو ثعلبہ بھاگ گئے اونٹ بکریاںان کے ہاتھ آئےبیس اونٹ مال غنیمت میں ملے جبکہ لڑائی نہ ہوئی یہ لوگ چار رات مدینہ سے باہر رہے۔ اس سریہ میں ان کا پاس ورڈ امت امت تھا۔